چڑیلوں کے تہوار پر اریبہ حبیب نے بشریٰ بی بی کا روپ دھار لیا

ہالووین کا تہواراکتوبر کے آخر میں منایا جاتا ہے ہالووین کے تہوار پر لوگ بھوتوں اور چڑیلوں جیسا روپ دھار کر ایک دوسرے کو ڈراتے ہیں پاکستان کی شوبز شخصیات بھی اس تہوار کو مناتی دکھائی دیتی ہیں۔اریبہ حبیب نے بھی دیگر شوبز و فیشن انڈسٹری کی شخصیات کے ہمراہ ہالووین کا تہوار منایا اور انہوں نے ڈراؤنا میک اپ کرنے کے بجائے بشریٰ بی بی جیسا لباس پہنا، جس پر لوگوں نے انہیں آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے ان پر اسلامی لباس اور پردہ دار خاتون کا مذاق اڑانے کا الزام لگایا۔اریبہ حبیب نے بشریٰ بی بی جیسے لباس پہننے اور ان جیسا فیشن کرنے کے بعد کچھوائی گئی تصاویر انسٹاگرام اسٹوریز میں شیئر کیں جو دیکھتے ہی دیکھتے وائرل ہوگئیں اور لوگوں نے انہیں آڑے ہاتھوں لیا۔ تصاویر میں اریبہ حبیب کو بلکل بشریٰ بی بی جیسے لباس اور فیشن میں دیکھا جا سکتا ہے، ان کی تصاویر دیکھنے سے ہی گمان ہوتا ہے کہ وہ بشریٰ بی بی ہیں۔ ایک تصویر انہوں نے یاور اقبال کے ساتھ بھی شیئر کی، جس میں وہ ان کے بہت قریب دکھائی دیے۔دونوں کی تصاویر کو صارفین نے سوشل میڈیا پر شیئر کرتے ہوئے اریبہ حبیب کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے ان پر مذہبی لباس اور مذہبی شخص کا مذاق اڑانے کا الزام بھی لگایا۔لوگوں نے اریبہ حبیب پر تنقید کرتے ہوئے انہیں شرم دلانے کی کوشش کی کہ انہوں نے باپردہ اور معزز خاتون کے لباس کا مغربی اور شیطانی دن پر مذاق اڑایا۔بعض لوگوں نے اریبہ حبیب اور یاور اقبال کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے انہیں بد دعائیں بھی دیں۔لوگوں کی تنقید کے بعد اریبہ حبیب نے انسٹاگرام اسٹوری میں بشریٰ بی بی جیسا لباس پہننے پر معذرت بھی کی اور بتایا کہ وہ نہ صرف اپنے مذہب کی بے انتہا عزت کرتی ہیں بلکہ انہیں بشریٰ بی بی کا لباس بھی بے حد پسند ہے اور انہوں نے ان سے اظہار محبت کی خاطر ہی ایسا لباس پہنا۔انہوں نے لوگوں سے معافی مانگتے ہوئے لکھا کہ وہ اپنی غلطی پر دل سے معافی کی طلب گار ہیں اور آئندہ وہ یہاں ایسی چیزیں شیئر کرنے سے قبل ان کا سنجیدگی سے جائزہ لیں گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں