وزیراعظم کادورہ لاہورکی کوریج میں ناکامی،پی ٹی وی کے17 ملازمین برطرف

پاکستان ٹیلی ویژن (پی ٹی وی) کی جانب سے گزشتہ ہفتے وزیراعظم شہباز شریف کے دورہ لاہور کی ’مناسب‘ کوریج نہ کیے جانے پر 17 ملازمین کو معطل کر دیا گیا۔ وزیر اعظم شہباز شریف نے 24 اپریل کو لاہور کی کوٹ لکھپت جیل اور رمضان بازاروں کا دورہ کیا تھا تاہم پی ٹی وی کی ٹیم پیشگی اطلاع کے باوجود مناسب طریقے سے کام کرنے والے لیپ ٹاپ کی عدم دستیابی کی وجہ سے موقع پر موجود واقعات کی کوریج کرنے میں ناکام رہی تھی۔اسٹینڈرڈ آپریٹنگ پروسیجر کے مطابق، رپورٹرز اور پروڈیوسرز پر مشتمل ایک وی وی آئی پی ٹیم وزیراعظم کی کوریج کی ذمہ دار تھی، ٹیم جدید ترین نشریاتی آلات سے لیس تھی، جس میں لائیو اسٹریمنگ کے لیے لیپ ٹاپ بھی شامل تھا جس سے کسی بھی تقریب کی فوٹیج بروقت اپ لوڈ کی جاسکتی ہیں۔روایتی طور پر پی ٹی وی کی اعلیٰ انتظامیہ کی جانب سے اعلیٰ حکام کو معاملات کی سرکوبی میں معطل کیا جاتا ہے لیکن اس بار عہدے سے ہٹائے جانے والوں میں دوسرے اور تیسرے درجے کے افسران بھی شامل ہیں۔دستاویزات کے مطابق وزیراعظم کے دورے کے اگلے ہی روز 25 اپریل کو پی ٹی وی ایڈمنسٹریٹیو ڈیپارٹمنٹ نے وی وی آئی پی کوریج کے ڈپٹی کنٹرولر عمران بشیر خان کو معطل کر کے ان کا اضافی چارج ہارون الٰہی کو سونپ دیا تھا، جو کہ آفیشل کنٹرولر نیوز ہیں۔ علاوہ ازیں ایگزیکٹو پروگرامز منیجر قیصر شریف کو سیف الدین کی بجائے لاہور سینٹر کے جنرل منیجر کا اضافی چارج سونپا گیا اور سہیل احمد کو ہٹا کر کرنٹ افیئر پروڈیوسر اشتیاق احمد کو ہیڈ آف کرنٹ افیئر مقرر کر دیا گیا ہے۔مزید برآں دستاویزات میں کہا گیا ہے انتظامیہ نے مبینہ طور پر غفلت برتنے پر متعدد انجینئرز اور کیمرہ مین کو بھی معطل کیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں