میں قابل فروخت نہیں،جارج کلونی نےایک دن کام کےعوض ساڑھے3 کروڑڈالرکی آفرٹھکرادی

جارج کلونی نے ایک دن کام کرنے کے عوض ساڑھے 3 کروڑ ڈالر کی رقم ٹھکرا دی۔ہندوستان ٹائمز لیڈرشپ سمٹ 2022 میں جارج کلونی سےبھارتی اداکار انیل کپور نے اس حوالے سے سوال کیا تو کلونی کا کہنا تھا کہ ان لوگوں کو خواتین کے حقوق کے حوالے سے غیر ذمہ دارانہ بات کرنے پر جیل میں ڈالا گیا تھا۔اداکار نے بتایا کہ مجھے جنہوں نے ساڑھے تین کروڑ ڈالر کی پیشکش کی وہ لوگ جیل میں قید افراد سے وائٹ واش کرنے کے لیے کروڑوں ڈالر لے رہے تھے اور اسی لیے مجھے ایک دن کام کرنے پر ساڑھے تین کروڑ ڈالر کی آفر دی گئی۔ جارج کلونی نے کہا کہ مجھے یہ بات بہت عجیب لگتی ہے کہ آپ کسی ایسے شخص کے لیے کام کریں جو لوگوں کے شہری اور انسانی حقوق سلب کر رہا ہو۔ مجھے بہت مشکل لگا کہ ان لوگوں سے میں یہ رقم لوں اور میرا نام استعمال کرکے وہ لوگ اپنا نام صاف کرنا چاہتے تھے۔ہالی ووڈ اداکار نے کہا کہ میری نیک نامی کہیں زیادہ معنی رکھتی ہے، میں نے اپنی اہلیہ سے بات کی، ہم نے سوچا کہ ہم ایک فاؤنڈیشن بنا کر اس میں یہ رقم ڈال دیں گے لیکن ہر چیز کی قیمت ہوتی ہے اور میری عزت کی کوئی قیمت نہیں لگا سکتا، میرے والدین نے مجھے جو کچھ سکھا کر ایسا انسان بنایا ہے وہ قابل فروخت نہیں ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں