مصطفٰی نوازکھوکھر نےبطور سینیٹراستعفیٰ دینےکااعلان کردیا

پاکستان پیپلزپارٹی کے رہنما مصطفٰی نواز کھوکھر نے بطور سینیٹر  استعفیٰ دینےکا اعلان کردیا۔ٹوئٹر پر ایک بیان میں مصطفٰی نواز کھوکھر کا کہنا تھا کہ چیئرمین سینیٹ کو کل اپنا استعفیٰ پیش کروں گا۔مصطفٰی نواز کھوکھرکا کہنا تھا کہ آج پارٹی کے سینیئر رہنما سے ملاقات ہوئی، انہوں نے بتایا کہ پارٹی قیادت میرے سیاسی مؤقف سے خوش نہیں تھی اور سینیٹ کی نشست سے میرا استعفیٰ چاہتی ہے، اس لیے میں بخوشی سینیٹ سے استعفیٰ دینے پر راضی ہوگیا۔مصطفٰی نواز کھوکھرکا مزیدکہنا تھا کہ ایک سیاسی کارکن کے طور پر میں عوامی مفاد کے معاملات پر اپنی رائےکا اظہار کرنا اپنا حق سمجھتا ہوں، سندھ سے سینیٹ کی نشست دینے پر  پارٹی قیادت کا مشکور ہوں۔ مصطفیٰ نواز نے استعفے کے اعلان سے ڈیڑھ گھنٹے پہلے بیان دیا تھا کہ کیا ہم بھارتی لوک سبھا کے ممبر ہیں؟ ہمارے فونز کو مسلسل ٹیپ کیوں کیا جاتا ہے؟ نقل وحرکت کی نگرانی کی جاتی ہے، رازداری پر حملہ کیوں کیا جاتا ہے؟ سیاستدان،جج اور صحافی اکثر اس کا شکار ہوتے ہیں، ہم ریاست کا اتنا ہی حصہ ہیں جتنا کہ کوئی اور، ہم غدار نہیں ہیں۔ذرائع کا کہنا ہےکہ مصطفٰی نواز کھوکھر کو فاروق ایچ نائیک نے پارٹی قیادت کا پیغام پہنچایا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں