صومالیہ کےصدرنےوزیراعظم کومعطل کردیا

صومالیہ کے صدر نے کرپشن کے الزامات پر وزیراعظم کو معطل کردیا۔ صومالیہ کے صدر محمد عبداللہ محمد نے وزیراعظم محمد حسین رابیل اور میرین فورس کے کمانڈر کو بھی عہدوں سے ہٹادیا ہے۔ صدارتی دفتر سے جاری بیان میں وزیراعظم کو ہٹائے جانے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا گیا ہےکہ صدر نے وزیراعظم محمد حسین رابیل کے کرپشن میں ملوث ہونے پر ان کے اختیارات مکمل طور پرمعطل کردیے ہیں۔صدارتی بیان میں وزیراعظم پر الزام عائد کیا گیا ہےکہ محمد حسین رابیل زمینوں پر قبضے کے کیس کی تحقیقات میں اختیارات کا استعمال کرتے ہوئے مداخلت کررہے تھے۔دوسری جانب صومالی وزیراعظم کے دفتر نے صدر کے فیصلے کو اشتعال انگیزی قرار دیا ہے۔صومالی وزیراعظم آفس کے ٹوئٹراکاؤنٹ سے جاری بیان میں اسے فوجی بغاوت کی ایک کوشش قرار دیا گیا ہے۔وزیراعظم ہاؤس کا کہنا تھا کہ محمد رابیل پر امن انتقال اقتدار کے لیے الیکٹرول طریقہ کار میں اپنی قومی ذمہ داریاں پوری کرنے کے لیے پرعزم ہیں۔صدر محمد عبداللہ کے فیصلے پر صومالی حکومت کے ترجمان کا کہنا تھا کہ صدر کا فیصلہ ایک بلواسطہ بغاوت ہے، وزیراعظم کے دفتر کے باہر فوجی اہلکار تعینات کرنے سے انہیں ذمہ داریاں انجام دینے سے نہیں روکا جاسکتا۔واضح رہےکہ صومالیہ میں تاخیر کا شکار الیکشن یکم نومبر کو شروع ہوئے تھے جنہیں 24 دسمبر کو مکمل ہونا تھا تاہم نئے منتخب ہونے والے ممبران کا کہنا ہےکہ اب تک 275 ارکان میں سے صرف 24 ہی منتخب ہوسکے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں