روسی فوج کا یوکرین کےشہر کریمنا پر قبضہ

روسی فوج نے یوکرین کے شہر کریمنا پر قبضہ کرلیا۔کریمنا کے گورنر نے شہر پر روسی فوج کے قبضے کی تصدیق کی ہے۔ روسی افواج نے یوکرین پر تازہ حملوں کے بعد مشرقی یوکرین کے شہر کریمنا پر قبضہ کرلیا جس کے بعد یوکرین کی فوج شہر سے باہر نکل گئی ہے۔ غیر ملکی میڈیا کے مطابق روسی حملے سے پہلے یوکرین کے مشرقی شہر کریمنا کی آبادی 18 ہزار تھی جب کہ مشرقی یوکرین پر ڈونباس کے علاقے میں تازہ روسی حملے کے بعد کریمنا روس کے قبضے میں آنے والا پہلا شہر ہے۔کریمنا کے گورنر کا کہنا تھا کہ شہر اب روس کے قبضے میں ہے اور اس کی افواج شہر میں داخل ہوچکی ہیں، ہمارے دفاعی اہلکار پیچھے ہٹ گئے ہیں اورانہوں نے روسی فوج سے لڑنے کے لیے نئی جگہ پر پوزیشن لے لی ہے۔گورنر کریمنا نے شہر پرروسی قبضے کا وقت بتانے سے گریز کرتے ہوئے کہا کہ روسی فوج نے شہرپر ہر طرف سے حملہ کیا جس کے نتیجے میں عام شہریوں سمیت ہلاکتوں کی تعداد کا اندازہ لگانا ناممکن ہے تاہم ہمارے پاس 200 اموات کی مصدقہ اطلاعات ہیں۔ واضح رہے کہ روسی فوج نے رواں برس 24 فروری کو یوکرین پر حملہ کیا تھا جسے روس نے خصوصی ملٹری آپریشن کا نام دیا تھا جب کہ روس کا کہنا تھا کہ اس آپریشن میں عام شہریوں کو نشانہ نہیں بنایا جائے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں