دادو:میڈیکل کالج کی طالبہ عصمت نےمبینہ طورپر خودکوگولی مارکرخودکشی کرلی

دادو میں میڈیکل کالج کی طالبہ عصمت نے مبینہ طور پر خود کو گولی مار کر خودکشی کرلی ۔ پیپلز میڈیکل کالج نواب شاہ میں چوتھے سال کی طالبہ عصمت کی لاش سیتا روڈ پر اس کے گھر سے ملی تھی۔خودکشی کرنے والی میڈیکل کی طالبہ کا والدین کو لکھا گیا آخری خط سامنے آ گیا-عصمت کے والدین کا دعویٰ ہےکہ بیٹی نےخودکشی کی ہے، سینےپرگولی کانشان ہے۔عصمت کی موت خود کشی تھی یا قتل ؟ معمہ بن گیا ہے۔ تین روز قبل والد کی مدعیت میں 5 ملزمان پر لڑکی کو ہراساں کرنے کا مقدمہ بھی درج کیا گیا تھا، ایف آئی آر میں والدین نے کہا تھا کہ ثمن سولنگی نامی شخص نے جعلی نکاح نامہ بناکر لڑکی کو بلیک میل کیا ، 90 ہزار روپے ہتھیالیے۔ایف آئی آر کے مطابق ذہنی دباؤ کا شکار لڑکی رقم ملزم کے اکاؤنٹ میں منتقل کرتی رہی ، لاش کا پوسٹ مارٹم مکمل کرلیا گیا ہے، ایف آئی آر میں نامزد ایک ملزم گرفتار ہے۔دوسری جانب والدین کے نام لڑکی کا خط بھی سامنے آگیا ہے، خط میں عصمت نے والدین سے معذرت کی ہے۔ ادھر ویمن پروٹیکشن سیل کی انچارج نےعصمت کےکمرے کا معائنہ کیا اور اس کے زیرِ استعمال اشیا تحویل میں لے لیں

اپنا تبصرہ بھیجیں