توشہ خانہ تحائف :عمران خان جس عدالت میں جانا چاہیں جائیں ہم سامنا کریںگے،شاہزیب خانزادہ

شاہزیب خانزادہ نے عمران خان کے الزامات پر کہا ہے کہ چیئرمین پی ٹی آئی جس عدالت میں جانا چاہیں جائیں ہم سامنا کریں گے۔گزشتہ روز جیو نیوز عمران خان کی جانب سے بطور وزیراعظم توشہ خانہ کے تحفے فروخت کرنے والے یو اے ای میں مقیم پاکستانی عمر فاروق کو سامنے لایا تھا۔جیو نیوز کے پروگرام میں عمر فاروق نے بتایا تھا کہ انہیں عمران خان کے دور کے مشیر برائے احتساب نے انہیں فون کر کے بتایا کہ بہت قیمتی تحائف ہیں جو ہم فروخت کرنا چاہتے ہیں، یہ تحائف فرح جمیل کے ذریعے فروخت کیے گئے تھے۔اس پر عمران خان نے سوشل میڈیا پر کہا کہ بس بہت ہوگیا!کل جیو اور خانزادہ نے سرپرستوں کی مدد سے ایک مشہورِ زمانہ دھوکے باز اور عالمی سطح پرمطلوب مجرم کی تراشی گئی بے بنیاد کہانی کے ذریعے مجھ پر بہتان تراشی کی۔عمران خان نے اپنی ٹوئٹ میں مزید لکھا کہ میں نے اپنے وکلاء سے بات کی ہے اور میں جیو، خانزادہ اور اس دھوکے باز کیخلاف پاکستان میں ہی نہیں بلکہ برطانیہ اور متحدہ عرب امارات میں بھی قانونی چارہ جوئی کا ارادہ رکھتا ہوں۔عمران خان کی جانب سے سوشل میڈیا پر لگائے گئے الزامات پر شاہزیب خانزادہ نے ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ ہم نے اس معاملے پر تحریک انصاف کے رہنماؤں کو ردعمل کے لیے بارہا کہا لیکن ان کی جانب سے کوئی جواب نہ آیا، آج بھی عمران خان خود یا وہ جسے چاہیں ہمارے پروگرام میں بھیجیں ہم ان سے سوالات کریں گے اور وہ اپنے اوپر لگے الزامات کا جواب دیں، سب کچھ واضح ہو جائے گا۔شاہزیب خانزادہ کا مزید کہنا تھا ہم یہ اسٹوری پوری تحقیق اور محنت کے بعد سامنے لائے ہیں اور ہم اپنے مؤقف پر قائم ہیں، دعویٰ دائر کرنا عمران خان کا حق ہے، عمران خان جہاں چاہیں ہمیں بلائیں ہم ان کا سامنا کریں گے لیکن ہم یہ ضرور چاہیں گے کہ عمران خان پر جو الزامات لگ رہے ہیں وہ ان کا جواب ضرور دیں۔انہوں نے مزید کہا کہ ہم جب بھی ان کے رہنماؤں کو پروگرام میں آنے کی دعوت دیتے ہیں تو وہ ذاتی حملے شروع کر دیتے ہیں، اس کے باوجود ہم یقینی بناتے ہیں کہ تحریک انصاف کے رہنماؤں کو دعوت دیں۔ان کا کہنا تھا ابھی تک الزام عمران خان پر لگا نہیں فرح گوگی اور شہزاد اکبر پر لگا تھا، عمران خان یقینی بناتے ہیں کہ جب بھی الزام فرح گوگی پر لگے تو وہ خود ان کا دفاع کرنے آجاتے ہیں۔شاہزیب خانزادہ کا کہنا تھا عمران خان اس کا نام بتانے سے کترا رہے ہیں جسے گھڑی بیچی، قوم کو اس کا نام بتا دیں، خان صاحب نے روایت بنالی ہے کہ آپ مجھ سے سوال کیوں پوچھتے ہیں، سوال پوچھنا ہماراحق ہے، جس صحافی نے یہ اسکینڈل کور کیا اس کے ساتھ کیا کیا ہوا وہ اپنی کہانی بار باربتا رہا ہے۔ شاہزیب خانزادہ کے عمران خان سے چند سوالات فرح گوگی کے ذریعے 20 لاکھ ڈالر میں گھڑی کیوں فروخت کی؟ تحفے عمر فاروق تک کیسے پہچے؟ عمر فاروق کو نہیں فروخت کیے تو کس کو بیچے؟ تحائف سے ملنے والی رقم پاکستان لائی گئی یا نہیں؟ تحائف سے ملنے والی رقم کی بینکنگ ٹرانزیکشن کہاں ہے؟ اتنی بڑی رقم پاکستان نہیں لائی گئی تو وہ کہاں گئی؟ 28 کروڑ کی جگہ پونے 6 کروڑ روپے میں فروخت کیوں دکھائی؟ 2019 میں تحائف کی قیمت 1 ارب 70 کروڑ روپے تھی، محض 2 کروڑ 12 لاکھ روپے ادا کر کے تحائف کیوں لیے؟ کیا تحائف کی رقم کم دکھانے کا مقصد منی ٹریل چھپانا تھا؟ قومی خزانے کو ایک ارب روپے سے زائد کا نقصان کیوں پہنچایا گیا؟ عمران خان فرح گوگی کا دفاع کرنے خود کیوں میدان میں آجاتے ہیں؟ اگر تحائف عمر فاروق کو نہیں بیچے گئے تو عمران خان اس شخص کا نام بتا دیں جسے گھڑی بیچی گئی؟

اپنا تبصرہ بھیجیں