بھارتی پنجاب کانگریس کےسابق صدرنوجوت سنگھ سدھوکو1 سال قید کی سزا

بھارتی پنجاب کانگریس کے سابق صدر نوجوت سنگھ سدھو کو 1 سال قید کی سزا سنادی گئی۔ بھارتی میڈیا کےمطابق سپریم کورٹ نے 1988 کے روڈ ریج کیس میں نوجوت سنگھ سدھو کو 1 سال قید کی سزا سناتے ہوئے جیل بھیج دیا۔ مئی 2018 میں سپریم کورٹ نے نوجوت سنگھ سدھو کو 1 ہزار روپے جرمانے کی سزا کے ساتھ چھوڑ دیا تھا۔ سپریم کورٹ نے ستمبر 2018 میں اپنے فیصلے پر اثر نو جائزہ لینے کا فیصلہ کیا تھا۔ سپریم کورٹ نے بھارتی پینل کوڈ کی سیکشن 323 کے تحت اس جرم میں سب سے زیادہ سزا ( ایک برس قید) سنائی ہے۔ واضح رہے کہ سال 1988 میں میں سڑک پر جھگڑے کے دوران ایک شخص کی ہلاکت ہوئی تھی۔ مرنے والے شخص کا نام گرنام سنگھ تھا اور اس کا تعلق پٹیالہ سے تھا۔ نوجوت سنگھ سدھو 1988 میں بھارتی کرکٹ ٹیم کا حصہ تھے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں