ایران نے ہائپر سونک میزائل تیار کر لیا

ایرانی پاسداران انقلاب کے ایئرواسپیس یونٹ کے کمانڈرنے دعویٰ کیا ہے کہ ایران نے ایک ہائپر سونک میزائل تیار کیا ہے جو تمام دفاعی نظاموں کو عبور کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔غیر ملکی خبر رساں ایجنسی ’اے ایف پی‘ کے مطابق ایران کے پاسداران انقلاب کے ایئرواسپیس یونٹ کے کمانڈر جنرل امیرعلی حاجی زادہ نے کہا کہ ہائپر سونک بیلسٹک میزائل فضائی دفاعی نظام کا مقابلہ کرنے کے لیے تیار کیا گیا ہے۔ایرانی کمانڈر نے کہا کہ یہ میزائل دفاعی نظام کو عبور کرنے کے قابل ہو گا اور انہیں یقین ہے کہ اسے روکنے لیے ایسا نظام تیار کرنے میں کئی دہائیاں لگیں گی۔انہوں نے کہا کہ دشمن کے میزائل شکن نظام کو نشانہ بنانے والا یہ نظام میزائلوں کے میدان میں موجودہ دور کی بڑی کامیابی ہے۔ادھرانٹرنیشنل اٹامک انرجی ایجنسی کے سربراہ رافیل گروسی نے ایران کے اس اعلان پر تشویش کا اظہار کیا ہے مصر میں موسمیاتی تبدیلی کے حوالے سے ہونے والی تقریب کے سائڈلائنس پربات کرتے ہوئے عالمی اٹامک انرجی کے سربراہ رافیل گروسی نے کہا کہ ’ہم سمجھتے ہیں کہ اس طرح کے اعلانات ایرانی جوہری پروگرام کی جانب توجہ اور تشویش میں اضافہ کرنا ہے مگر اس سے ایران کے جوہری پروگرام کے حوالے سے مذاکرات پر کوئی اثر و رسوخ نہیں ہوگا خیال رہے کہ ایران کی طرف سے ایسا اعلان اس وقت ہوا ہے جب اس نے روس کو ڈرونز فراہم کرنے کا اعتراف کیا تھا مگر ساتھ ہی یہ بھی کہا کہ وہ ڈرون یوکرین جنگ سے قبل بھیجے گئے تھے۔16 اکتوبر کو امریکی اخبار ’وانشنگٹن پوسٹ‘ نے رپورٹ کیا تھا کہ ایران روس کو میزائلیں بھیج رہا ہے مگر تہران نے اس کو مسترد کرتے ہوئے ’مکمل جھوٹی‘ رپورٹ قرار دیا تھا۔ ہائپر سونک میزائل روایتی مزائلوں کی طرح ہے جو جوہری ہتھیاروں سے ٹکر کھانے کی صلاحیت رکھتی ہے اور آواز کی رفتار سے 5 گنا زیادہ تیز اڑ سکتی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں